نواز شریف ملک کو کیا بنا نا چاہتے تھے؟امریکہ افغانستان اور بھارت کشمیر میں شکست کھا چکے۔حافظ سعید کے اہم انکشافات۔

نواز شریف ملک کو کیا بنا نا چاہتے تھے؟امریکہ افغانستان اور بھارت کشمیر میں شکست کھا چکے۔حافظ سعید کے اہم انکشافات۔

نواز شریف ملک کو کیا بنا نا چاہتے تھے؟امریکہ افغانستان اور بھارت کشمیر میں ... 31 مئی 2018 (13:26) 1:26 PM, May 31, 2018

سرگودھا(ویب ڈیسک) جماعتِ الدعوہ کے امیر حافظ سعید احمد کا کہنا تھا کہ افغانستان میں شکست کے بعد ڈونلڈ ٹرمپ کی نئی افغان پالیسی دراصل پاکستان مُخالف پالیسی ہے .امریکہ کہتا ہے کہ افغانستان میں شکست پاک فوج کی وجہ سے برداشت کرنی پڑی پاکستانی قوم نے امریکہ کو نکلنے پر مجبور کیا ہے .جس کے انتقام میں امریکہ پاکستانی فوج کو کمزور کرنے اور پابندیاں عائد کرنے کا منصوبہ بنا رہا ہے لیکن انشااللہ امریکہ کو ایک بار پھر رسوائی و تذلیل کے علاوہ کُچھ حاصل نہیں ہو گا.سرگودھا میں جلسہ سے مخاطب ہوتے ہوئے حافظ سعید کا کہنا تھا کہ نواز شریف کو مُلک کو سیکولر بنانے کیلئے بھیجا گیا تھا ۔

موجودہ حُکمران مودی حکومت کی ناراضگی مول نہیں لینا چاہتے کشمیر آذد نہ ہونے کی ایک بڑی وجہ اسلام آباد کی نوکر اور غُلام حکومت ہے .نیا پاکستان دین واسلام کے قوانین و ضوابط کو اپناتے ہوئے ہی بنایا جا سکتا ہے .انڈیا کا چیف آف آرمی اسٹاف اپنی ناکامی کشمیر میں تسلیم کر چُکا ہے لیکن ہمارے حُکمران انڈیا سے دوستی کی پینگیں بڑھا رہے ہیں اور دوسری جانب انڈیا دریا پر ڈیم بنا کر ہمارا پانی روک رہا ہے . حافظ سعید کا کہنا تھا کہ جلد ہی دُنیا میں سے طاغوتی طاقتوں کا خاتمہ ہو گا اور اسلام کا غلبہ ہو گا .

متعلقہ خبریں