ایک انگریز جج نے فیصلہ کرتے ہوئے کہا کہ آج مسلمان ہار گئے مگر اسلام جیت گیا

ایک انگریز جج نے فیصلہ کرتے ہوئے کہا کہ آج مسلمان ہار گئے مگر اسلام جیت گیا

ایک انگریز جج نے فیصلہ کرتے ہوئے کہا کہ آج مسلمان ہار گئے مگر اسلام جیت گیا 30 مئی 2018 (23:03) 11:03 PM, May 30, 2018

کاندھلہ میں ایک مرتبہ مسلمانوں اورہندوؤں کےدرمیان زمین کے معاملےپر جگھڑا ہوگیا انگریزکا دورتھا مقدمہ انگریز کی عدالت میں پیش کیا گیاانگریزجج نے تجویزپیش کی کہ کوئ ایسی صورت ھے کہ آپ لوگ بات چیت کےساتھ اس معاملہ کو حل کر سکیں تو ہندوؤں نے جواب دیا کہ ہم آپ کو تنہائی میں ایک آدمی کا نام بتاتے ہیں اگر انہوں نےکیاکہ زمين مسلمانوں کی ہےتوانہیں دے دیجئےگااور اگر کہاکہ یہ زمين ھماری ہے تو ہمارےحوالےکر دیجئےگاہندوؤں نے مفتی الٰہی بخش کاندھلوی کا نام بتایا مسلمان یہ سن کر بہت خوش ہوئے کہ چلو مسلمان ہےتو ہمارےحق میں ہی فیصلہ دیگا.

اگلی پیشی پر مفتی صاحب حاضرہوئےتوجج نےکہاکہ یہ زمین کس کی ہے تومفتی صاحب نےجواب دیاکہ ہندوؤں کی ہےجج نےفیصلہ ہندوؤں کےحق میں دےدیااورایک عجیب بات کہی کہ "آج مسلمان ہارگئے مگراسلام جیت گیا"