شامی شہری کی مدد کرنے والے کے حق میں دبئی کے حکمران کا ایسا اقدام کہ آپبھی داد دیں گے

شامی شہری کی مدد کرنے والے کے حق میں دبئی کے حکمران کا ایسا اقدام کہ آپبھی داد دیں گے

شامی شہری کی مدد کرنے والے کے حق میں دبئی کے حکمران کا ایسا اقدام کہ آپبھی داد ... 28 جون 2018 (22:42) 10:42 PM, June 28, 2018

شیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے امارات کے ایک کسٹم افسر کو اومان کے ساتھ سرحد پر واقع حتا چیک پوائنٹ پر پھنس جانے والے ایک شامی خاندان کی بروقت مدد پر اگلے گریڈ میں ترقی دے دی ہے۔

دبئی میڈیا آفس کے مطابق سالم عبداللہ بن نبھان البدواوی شیخ محمد کو یکم شوال عید کے پہلے دن سے افسر کے رینک سے فرسٹ افسر کے عہدے پر ترقی دے دی گئی ہے۔

شیخ محمد نے اپنے سرکاری ٹویٹر اکاؤنٹ پر ایک ویڈیو شئیر کی ہے۔اس میں ایک ریڈیو پیش کار فاتح نامی شامی شخص سے گفتگو کررہا ہے کہ کیسے اس اماراتی افسر نے اومان کی سرحد کے نزدیک ان کی کار خراب ہونے کے بعد خدا ترسی کا مظاہرہ کرتے ہوئے انھیں اپنی کار کی پیش کش کی تھی۔

ضرور پڑھیں :شام کے جنوبی صوبے درعا میں روسی فضائیہ کا خوفناک حملہ،لاشوں کے ڈھیر لگ گئے،

ضرور پڑھیں :الیکشن میں دھاندلی کی نئی تاریخ رقم کی جا رہی ہے، الیکشن میں دھاندلی نہ رکی تو نتائج ہولناک ہوں گے، پچھلے کئی مہینوں کا ریکارڈ اٹھا کر دیکھ لیں، صرف میں اورمیرے ساتھی۔۔۔۔نواز شریف سینہ ٹھوک کر آ گئے سنگین الزام لگا دئیے

ضرور پڑھیں :سعودی عرب میں خواتین کو کار چلانے کی اجازت ملنے کے بعد کریم اور اُوبر کی سواریاں بھی خواتین اٹھائیں گی۔

فاتح نے جواب میں ریڈیو پیش کار کو بتایا کہ ’’جمعہ کو عید کے پہلے دن صبح سات بجے کے قریب ہم مسقط کی جانب جا رہے تھے لیکن اچانک ہماری کار خراب ہو گئی کسٹم افسر نے ہمیں کار کھڑی کرنے کے لیے کہا اور پھر اس کار کو کسی ٹیکسی یا ٹرک کے ساتھ باندھ کر لے جانے کے لیے گاڑیوں کو رکنے کا اشارہ کیا تاکہ ہم اپنے گھر پہنچ سکیں لیکن کسی نے بھی مثبت جواب نہیں دیا کیونکہ یہ عید کا پہلا روز اور ابتدائی وقت تھا ۔پھر کسٹم افسر سالم بدواوی نے ہمیں اپنی ذاتی کار کی چابیاں دیں اور ہمیں کہا کہ وہ اس کار پر مسقط جا سکتے ہیں۔ اماراتی افسر پہلے حتا میں اپنے گھر تک گئے، وہاں اپنا سامان اتارا اور انھیں کہا کہ وہ اب وہاں سے اپنی جائے منزل تک جانے کے لیے اپنا سفر جاری رکھ سکتے ہیں۔اس شامی نے بتایا کہ مسقط سے واپسی پر اس افسر نے ہمیں دبئی میں واقع ہمارے گھر پہنچایا اور پھر ان کی خراب کار کو ایک ٹرک سے باندھ کر ایک میکنیک کے پاس پہنچا دیا تاکہ وہ اس کو ٹھیک کرسکے۔"

متعلقہ خبریں