عامر لیاقت نے خود کو واٹس ایپ پر ملنے والی گالیاں خود ہی اپنے شو میں پڑھ کر سنا دیں۔ میں وہ واحد آدمی ہوں جس نے ناموس رسالت کے نام پر وزارت چھوڑ دی تھی۔عامر لیاقت کا رد عمل

عامر لیاقت نے خود کو واٹس ایپ پر ملنے والی گالیاں خود ہی اپنے شو میں پڑھ کر سنا دیں۔ میں وہ واحد آدمی ہوں جس نے ناموس رسالت کے نام پر وزارت چھوڑ دی تھی۔عامر لیاقت کا رد عمل

عامر لیاقت نے خود کو واٹس ایپ پر ملنے والی گالیاں خود ہی اپنے شو میں پڑھ کر ... 26 مئی 2018 (13:27) 1:27 PM, May 26, 2018

عامر لیاقت نے خود کو واٹس ایپ پر ملنے والی گالیاں خود ہی اپنے شو میں پڑھ کر سنا دی ہیں - ان کا کہنا ہے کہ :" میں وہ واحد آدمی ہوں جس نے ناموس رسالت کے نام پر وزارت چھوڑ دی تھی باقی تو خیر سب مزے لوٹتے رہے رہے تھے اسلامی نظریاتی کونسل اور رویت ہلال کمیٹی ,یہ ایک ایسا سنجیدہ معاملہ ہے -کہ جس پر یہ بات آگے نہیں کی جا سکتی اور اس پہ قرآن کی توجیحات یہ نکال کر پیش کرنا کہ میت کے مردے کا ذکر ہے بالکل ذکر ہے کس نے کہا نہیں ہے -لیکن میرے والد اگر فوت ہو جائیں تو میں یہ کہوں گا کہ وہ اللّٰہ کو پیارے ہو گئے ہیں ,دار فانی سے کوچ کر گئے ہیں -"

ان کا کہنا ہے کہ :" جتنے لوگ یہاں بیٹھے ہیں علماء کرام ہیں جانتے ہیں اور ہیں تو بھی جانتے ہیں کوئی یہ نہیں کہے گا کہ میرا باپ مر گیا یا مر چکا ہے وہ کہے گا کہ یہ ان کی آخری آرام گاہ ہے یہاں وہ آرام فرما رہے ہیں یہ ہم دنیا کے باپ کے لیے کہتے ہیں لیکن جو ہمارے روحانی باپ ہیں ان کے لیے ہم کہہ رہے ہیں کہ مر چکا ہیں معذرت تو یہ جملہ جو ہے یہ قابل اعتراض ہے اور بجائے اس کے کہ وہ معذرت کرتے یا چلو معذرت نہیں کی تو اس کو کسی طرح سے حل کیا جاتا ,گزشتہ اٹھارہ سالوں سے میں حضرت علی کرم اللّٰہ وجہہ کے فرمان کی زندی مثال آپ کے سامنے موجود ہوں کہ "جس پر احسان کرو,اس کے شر سے ڈرو " ان کو کوئی نہیں بلاتا تو میں بلا لیتا ہوں میں کہتا تھا دیکھیے ہم اتحاد بین المنسالکین کی بات کرتے ہیں تو ان کو بلا لیتے ہیں لیکن مجھے کل پتہ چلا کہ یہ بڑے متشدد لوگ ہیں ,کہ یہ اس قدر پاکستان کے لیے خطرناک ہیں کہ میرے موبائل پر ان کے میسیجز ہیں -"

-اسی جمیعت اہل حدیث کی طرف سے گندے گندے اور انتہائی گھٹیا میسج آرہے ہیں جو میں دکھاؤن گا ضرور ان میں سے کچھ میسیجز میں نے سنسر کر دیے ہیں تاکہ فرقہ واریت نہ پھیلے میں کب تک چپ رہوں میں بھی مسلمان ہوں "

اس کے بعد انہوں نے سکرین پر میسیجز دکھاتے ہوئے خود پڑھ کر سنائے جس میں لوگوں کہا تھا کہ :"اس منافق اعظم کے لیے بددعا کرنے کو دل کرتا ہے چہرے سے ہی خباثت ٹپک رہی ہے اس رافضی کی " اگلے میسج میں تھا کہ "بھائی جان اللّٰہ آپ کو شہادت عطا فرمائے جلدی جلدی "اس میسج کو قتل کی دھمکی قرار دیتے ہوئے عامر لیاقت نے ایجنسیوں ,آئی ایس آئی ,ملٹری انٹیلیجنس سے کہا ہے کہ وہ یہ تمام نمبر نوٹ کر لیں -اگلے میسیج میں لکھا تھا کہ "گستاخ رسول ,گستاخ صحابہ عامر لیاقت نامی خبیث النفس " اس میسج کے جواب میں عامر لیاقت نے کہا کہ :" ہمیں گستاخ رسول کہہ رہا ہے ارے ہم نے تو ناموس رسالت کے لیے وزارت پر ٹھوکر مار دی تھی -" اگلے میسج میں لکھا تھا کہ :"اگر تو واقعی ڈاکٹر ہے تو تو بہت بڑا عالم ہے اور کچھ کہہ نہیں سکتا روزے میں "," عامر لیاقت اور ڈاکٹر کوکب تم جیسے لاکھوں مل کے بھی ڈاکٹر ذاکر نائیک اور خلیل الرحمٰن کا مقابلہ نہیں کر سکتے " اس پر عامر لیاقت کا کہنا تھا کہ :" ہم اگر ٹھوکر بھی مار دیں تو ڈاکٹر ذاکر نائیک جیسے پچاس پیدا ہو جائیں ہماری ٹھوکر ایسی ہوتی ہے -"اگلے میسیج میں لکھا تھا کہ :" اوئے عامر ہم سے آکر بات کر تو تو قاری خلیل الرحمٰن کے جوتے کی نوک کے برابر بھی نہیں ہے -" اس کے جواب میں عامر لیاقت نے کہا کہ:" تو تیرے قاری خلیل الرحمٰن نے شو میں آنے کے پانچ لاکھ روپے کیوں مانگے تھے -"

اسکے بعد عامر لیاقت نے دنیا نیوز کی ایک خبر دکھائی جس میں لکھا تھا کہ :"آج کے بعد میرے پروگرام میں کوئی قرآن و حدیث کے دلائل نہیں دے گا : عامر لیاقت '' عامر لیاقت نے اس خبر کو جھوٹا قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ :" دنیا نیوز والوں نے یہ خبر جعلی بنائی ہے فوری طور پر ان پر مقدمہ قائم کریں ,اور یہ میرا پروگرام ہے میں جس کو چاہوں بلاؤں جس کو چایوں نہ بلاؤں ,باقی سب گھر میں بیٹھیں -" اسکے بعد ایک اور سلائیڈ عامر لیاقت نے دکھائی جس میں لکھا تھا کہ :"ڈاکٹر ذاکر نائیک جس کی وجہ سے لاکھوں لوگ مسلمان ہوئے ہیں یہ دو نمبر ٹھگ باز مولوی کوکب نورانی اور گالیاں دینے والا عامر لیاقت ان کو کافر کہہ رہا ہے کیونکہ ان کا دھندا بند ہورہا تھا "اس کے جواب میں عامر لیاقت نے کہا ہے کہ :"پہلی بات تو یہ ہے کہ انہوں نے لاکھوں لوگوں کو مسلمان کیا ہے یا نہیں کیا ہمارے خواجہ معین الدین چشتی نے نوے لاکھ لوگوں کو مسلمان کیا ہے ہم ان کے ماننے والے ہیں -اور توبہ کے متعلق کیا کہتے ہو میں معافی مانگ چکا اللّٰہ سے جنہوں نے مجھے معاف کرنا تھا کر دیا ,ابو بکر رضی اللّٰہ تعالیٰ عنہ نے حضرت عمر رضی اللّٰہ تعالیٰ عنہ نے ,میں اللّٰہ سے توبہ کر چکا,میں تمہارے کہنے پر توبہ کیوں کروں یں نے جو کرنا تھا کر چکا اس وقت صحابہ کا سب سے بڑا محافظ میں کھڑا ہوں -"اگلے میسج میں لکھا تھا کہ ;"میں ہوں کوکب میں حدیث کی بات نہیں سنوں گا ,نہیں سنوں گا ,نہیں سنوں گا "اس میسج کے جواب میں عامر لیاقت نے کہا کہ :" کوکب نورانی صاحب جو مسجد میں صبح شام حدیث سناتے ہیں ان کو کہہ رہے ہیں کہ میں حدیث کی بات نہیں سنوں گا -"

میسیجز دکھانے کے بعد عامر لیاقت نے کہا کہ:" اس طرح کی گھٹیا زبان استعمال کرنے واکوں کو اسلام کا مکتبہ فکر شمار نہیں کیا جا سکتا "

متعلقہ خبریں