ترکی کی خلافت عثمانیہ توڑنے کیلئے لارنس آف اریبیہ کس کا منصوبہ تھا،سعودی عرب میں اور حجاز میں ایک آدمی تھا شیز مکہ کا سید تھا۔۔۔۔۔ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے عاشقوں نے کہا حجاز آپ کا۔۔۔۔پڑھئے اہم حقائق

ترکی کی خلافت عثمانیہ توڑنے کیلئے لارنس آف اریبیہ کس کا منصوبہ تھا،سعودی عرب میں اور حجاز میں ایک آدمی تھا شیز مکہ کا سید تھا۔۔۔۔۔ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے عاشقوں نے کہا حجاز آپ کا۔۔۔۔پڑھئے اہم حقائق

ترکی کی خلافت عثمانیہ توڑنے کیلئے لارنس آف اریبیہ کس کا منصوبہ تھا،سعودی ... 26 جون 2018 (20:53) 8:53 PM, June 26, 2018

لارنس آف اریبیہ کو باقاعدہ ایم آئی فائیو اور سکس نے باقاعدہ ٹرین کر کے بھیجا تھا اسے عربی سکھائی تھی فقہ سکھایا اور سب کچھ سکھایا اور اس کو پلانٹ کیا سعودی عرب میں اور حجاز میں ایک آدمی تھا شیز مکہ کا سید تھا اس نے اس کو جا کے کہا کہ حکومت تو تمہاری ہونی چاہیے ترک کہاں سے آ گئی خلافت تو قریش کے لیے ہے اس نے کھڑے ہو اعلان بغاوت کر دیا اور فائر کیا کھڑے ہو کے بالکنی میں تو نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے عاشقوں نے کہا حجاز آپ کا ,رسول صلی اللہ علیہ وسلم آپ کے خاندان سے آپ ہمیں صرف نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلمکی تبرکات دے دو ہم چلے جاتے ہیں اور پھر جو خلافت عثمانیہ کا حجاز میں گورنر تھا وہ لے کے آیا سارے تبرکات اور لا کے رکھ دیے ترکی کے میوزیم میں اس کے بعد ایک بہت بڑی سازش کی خلافت کو توڑنے کی اور انہوں نے خلافت کو توڑا اور ایک بندے کو اٹھایا مصطفیٰ کمال اتاترک یہ ایک یہودی تھا جو یہودی مسلمان ہوتے ہیں وہ دو آدمیوں کو لے کر وہاں داخل ہوا تھا الزبیلہ فرڈیننڈ نے یہودیو کا کہا تھا کہ میں تمہیں قتل کر دوں گی تو ایک لاکھ پچہتر ہزار یہودی تھے پچہتر ہزار عیسائی ہوگئے اور ایک لاکھ ترکی آ گئے خلافت عثمانیہ والے یہودیوں کے لیے بڑے نرم دل تھے اس کے بعد مصطفیٰ کمال اتاترک نے ترکی کو سیکولر بنانے کی کوشش کی نائٹ کلب کھولے شراب عام کی یہاں تک کہ عربی زبان میں آذان تک بند کر دی ترکی کی زبان میں آذان ہوتی تھی -

متعلقہ خبریں