ملّا فضل اللہ کی ہلاکت کے بعد مفتی نور ولی محسود کالعدم ٹی ٹی پی کا نیا سربراہ مقرر

ملّا فضل اللہ کی ہلاکت کے بعد مفتی نور ولی محسود کالعدم ٹی ٹی پی کا نیا سربراہ مقرر

ملّا فضل اللہ کی ہلاکت کے بعد مفتی نور ولی محسود کالعدم ٹی ٹی پی کا نیا ... 24 جون 2018 (12:35) 12:35 PM, June 24, 2018

کالعدم تحریکِ طالبان پاکستان ( ٹی ٹی پی) نے ہفتے کے روز مفتی نور ولی محسود کو اپنا نیا سربراہ مقرر کرنے کا اعلان کیا ہے اور سابق سربراہ ملّا فضل اللہ کی 14 جون کو افغانستان کے مشرقی صوبے کنڑ میں ایک ڈرون حملے میں ہلاکت کی بھی پہلی مرتبہ تصدیق کردی ہے۔

ٹی ٹی پی کے ترجمان محمد خراسانی نے مختلف خبررساں اداروں کو بھیجے گئے بیان میں ملّا فضل اللہ کی امریکا کے ایک ڈرون حملے میں ہلاکت کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ ’’ ہمارے لیے یہ امر باعث فخر ہے کہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے تمام لیڈر کافروں کے حملوں میں مارے گئے ہیں‘‘۔فضل اللہ کے دو پیش رو حکیم اللہ محسود اور بیت اللہ محسود بھی ڈرون حملوں میں ہلاک ہوئے تھے۔

ترجمان نے مزید بتایا ہے کہ گروپ کی شوریٰ کونسل نے مفتی نور ولی محسود کو نیا امیر منتخب کر لیا ہے۔اس نئے امیر کے بارے میں خیال کیا جاتا ہے کہ ان صاحب ہی نے 2012ء میں ملالہ یوسف زئی پر سوات میں قاتلانہ حملے کا حکم دیا تھا ۔

متعلقہ خبریں