زینب کے قاتل کو سر عام پھانسی دینے کے لئے درخواست دائر کردی گئی

زینب کے قاتل کو سر عام پھانسی دینے کے لئے درخواست دائر کردی گئی

زینب کے قاتل کو سر عام پھانسی دینے کے لئے درخواست دائر کردی گئی 23 جون 2018 (13:30) 1:30 PM, June 23, 2018

زینب کے قاتل کو سر عام پھانسی دینے کے لئے بچی کے والد امین انصاری نے ہائی کورٹ میں درخواست دائر کردی ہے۔ تفصیلات کے مطابق قصور میں قتل کی گئی معصوم بچی زینب کے والد امین انصاری نے مجرم عمران کو سرعام پھانسی دینے کے لیے درخواست دائر کی ہے۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ مجرم عمران نے سزا کے خلاف عدالت عالیہ اور سپریم کورٹ سے رجوع کیا لیکن عدالتوں نے شواہد اور بیانات کو مد نظر رکھتے ہوئے اس کی اپیلیں مسترد کردیں، قانون کے مطابق مجرم کو دی گئی سزائے موت پر عمل درآمد کیا جائے اور اسے سرعام پھانسی دی جائے تاکہ پھر کوئی اس قبیح فعل کا مرتکب نہ ہو.

خیال رہیکہ سپریم کورٹ نے بھی زینب قتل کیس کے مجرم عمران کی سزائے موت کے خلاف اپیل خارج کر دی۔ زینب قتل کیس کے مجرم عمران نے سپریم کورٹ میں اپنی سزائے موت کے خلاف اپیل دائر کی تھی۔کیس کی سماعت جسٹس آصف سعید کھوسہ پر مشتمل بنچ نے کی۔ عدالت عظمیٰ نے دلائل سننے کے بعد مجرم کی سزائے موت کے خلاف اپیل خارج کر دی۔

یاد رہیکہ لاہور ہائی کورٹ نے زینب کے قاتل عمران کی سزا کے خلاف درخواست دائر کر لی تھی - عمران کی سزا کے خلاف آئندہ ہفتے جسٹس آصف کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ اس کیس کی سماعت کی - اس کے علاوہ ہائی کورٹ نے زینب کے والد کو محمد امین کو جو سیکیورٹی دی گئی تھی وہ بھی واپس لے لی تھی -ان کا کہنا تھا کہ عمران اب جیل میں آپ کو کسی سے کوئی خطرہ نہیں -اس لیے آپ کو سیکیورٹی کی بھی کوئی ضرورت نہیں ہے -

یاد رہیکہ سفاک قاتل عمران نے ننھی زینب کو زیادتی کیبعد قتل کر دیا تھا اور لاش کوڑے کے ڈھیر پر پھینک دی تھی۔جسکی وجہ سے پورے ملک میں غم و غصے کی لہر دوڑ گئی اور عوام نے قاتل کو سخت سز ا دینے کا مطالبہ کیا تھا۔

متعلقہ خبریں