شمالی کوریا نے 200 ہلاک امریکی فوجیوں کی باقیات امریکہ کیحوالے کردیں

شمالی کوریا نے 200 ہلاک امریکی فوجیوں کی باقیات امریکہ کیحوالے کردیں

شمالی کوریا نے 200 ہلاک امریکی فوجیوں کی باقیات امریکہ کیحوالے کردیں 21 جون 2018 (16:14) 4:14 PM, June 21, 2018

امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ شمالی کوریا نے 200 امریکی فوجیوں کی باقیات امریکہ کے حوالے کردی ہیں جو لگ بھگ 65 سال قبل جنگِ کوریا کے دوران لاپتا ہوگئے تھے۔تاہم امریکی فوج نے تاحال باقیات کی اس واپسی کے متعلق کوئی باضابطہ بیان جاری نہیں کیا ہے۔صدر ٹرمپ نے فوجیوں کی باقیات کی واپسی کا اعلان بدھ کو ریاست منی سوٹا کے شہر ڈلوتھ میں اپنے حامیوں کے ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

بعض امریکی حکام نے منگل کو نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر صحافیوں کوبتایا تھا کہ آئندہ چند روز کے دوران شمالی کوریا کی حکومت بہت سے لاپتا امریکی فوجیوں کی باقیات جنوبی کوریا میں اقوامِ متحدہ کی کمانڈکے سپرد کرے گی جنہیں بعد ازاں امریکی ریاست ہوائی میں 'ہیکام ایئرفورس بیس' منتقل کیا جائے گا۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان نے گزشتہ ہفتے سنگاپور میں ہونے والی اپنی تاریخی ملاقات میں لاپتا امریکی فوجیوں کی باقیات کی حوالگی پر اتفاق کیا تھا جسے امریکی صدر نے اپنی بڑی کامیابی قرار دیا تھا۔ 1950 سے 1953ء کے دوران جزیرہ نما کوریا میں ہونے والی جنگ میں پینٹاگون کے مطابق 36 ہزار سے زائد امریکی فوجی اہلکار ہلاک ہوئے تھے۔اس جنگ میں شریک 7700 امریکی فوجیوں کا کوئی پتا نہیں چل سکا تھا اور ان میں سے زیادہ تر ان علاقوں میں تعینات تھے جو اب شمالی کوریا کی حدود میں ہیں۔

متعلقہ خبریں