قانون سازی پر استحقاق صرف پارلیمنٹ کا ہی ہے۔ صدیق الفاروق

قانون سازی پر استحقاق صرف پارلیمنٹ کا ہی ہے۔ صدیق الفاروق

قانون سازی پر استحقاق صرف پارلیمنٹ کا ہی ہے۔ صدیق الفاروق 20 جون 2018 (16:19) 4:19 PM, June 20, 2018

ن لیگ کے رہنما صدیق الفاروق کا کہنا ہے کہ :"عوام ووٹ دے کے جس کو پانچ سال کے لیے اسمبلی میں بھیجتے ہیں ان کا کام ہوتا ہے عوام کے پاس جانا اور ان کے مسائل حل کرنا ہے اب جو دو سال میں ایک دفعہ یا پانچ سال میںایک دفعہ جائے گا اس کو عوام کے مسائل کا کیا پتہ ہے -میرا خیال ہے کہ قانون سازی پر استحقاق صرف پارلیمنٹ کا ہی ہےاس کا کام ہے کہ وہ آئین اور قانون کی رو سے کام کرے -آج کل تو پتہ نہیں ایسا ہو رہا ہے یا نہیں -جب کسی ادارے کا سربراہ منتخب کیا جاتا ہے تو اس کا مقصد ہوتا ہے ادارے کو تباہی سے بچانا وہ سارے کام کر دیتا ہے -لیکن ان سب میں سے اس کے کام کچھ نہیں آتا میں نے بہت سے لوگوں کو ناراض کیا زمینوں کے حوالے سے ان اقدامات کی کیا حیثیت ہےلیکن ہاں اپنے اثاثے چھپانا اگر جائز اثاثے ہیں تو کیوں چھپائے اگر چھپائے گا تو پھر سزا ملنی چاہیے لیکن میرے خیال میں سیتا وائٹ اور ریحام خان کا کیس واقعی اہم ہے ایک اسلامی ریاست میں جہاں آئین و قانون قرآن وسنت سے مآخذ ہوں وہاں ایک آدمی کا کردار بڑا اہم ہے - یہ جاننااعوام کا حق ہے کہ ہم نے پانچ سالوں میں کیا کیا اور پیپلز پارٹی نے یہ نہیں بتایا عوام نے ان کو اٹھا کے باہر پھینک دیا ہے -"

متعلقہ خبریں