قلند ر بخش جر ات:شب گھر جو رہا مرے وہ مہماں..تھا صبح یہ کس ادا سے کہنا

قلند ر بخش جر ات:شب گھر جو رہا مرے وہ مہماں..تھا صبح یہ کس ادا سے کہنا

قلند ر بخش جر ات:شب گھر جو رہا مرے وہ مہماں..تھا صبح یہ کس ادا سے کہنا 18 مئی 2018 (15:37) 3:37 PM, May 18, 2018

الفت سے ہو خاک ہم کو لہنا

قسمت میں تو ہے عذاب سہنا

دھیان اس کے میں ہم کو سر بہ زانو

آنکھیں کیے بند بیٹھے رہنا

منہ چاہئے چاہنے کو یوں جی

کیا تم نے کہا یہ پھر تو کہنا

اللہ رے سادگی کا عالم

درکار نہیں کچھ اس کو گہنہ

کر بند نہ اشک چشم تر کو

بہتر ناسور کا ہے بہنا

قائم رہے کیا عمارت دل

بنیاد میں تو پڑا ہے ڈھنا

شب گھر جو رہا مرے وہ مہماں

تھا صبح یہ کس ادا سے کہنا

طاقت نہ رہی بدن میں ہے ہے

قربان کیا تھا یاں کا رہنا

دل نے بھی دیا نہ ساتھ جرأتؔ

کیا دوش کسی کو دیجے لہنا