مصری ماہرین آثار قدیمہ نے زیر زمین تدفین کی 2000 سال پرانی سرنگ اور ممی بنانے والی ورک شاپ دریافت کر لی۔

مصری ماہرین آثار قدیمہ نے زیر زمین تدفین کی 2000 سال پرانی سرنگ اور ممی بنانے والی ورک شاپ دریافت کر لی۔

مصری ماہرین آثار قدیمہ نے زیر زمین تدفین کی 2000 سال پرانی سرنگ اور ممی بنانے ... 18 جولائی 2018 (17:34) 5:34 PM, July 18, 2018

مصری ماہرین آثار قدیمہ نے زیر زمین تدفین کی سرنگ اور ممی بنانے والی ورک شاپ دریافت کی ہے۔ یہ دریافت اس سال اپریل میں ہوئی تھی، جس کی تفصیلات اب بتائی گئی ہیں۔ قاہرہ کے جنوب میں واقع اس سرنگ سے 35 ممیاں بھی دریافت ہوئیں ہیں۔

ماہرین آثار قدیمہ کو امید ہے کہ نئی دریافت سے وہ قدیم مصر میں ممی بنانے کے لیے استعمال ہونے والے تیل کے متعلق مزید جان سکیں گے۔اس جگہ سے ماہرین کو سینکڑوں پتھر کے مجسمے، بوتلیں اور مرتبان ملے ہیں۔ یہ سب چیزیں ممی بنانے کے عمل میں استعمال ہوتے تھے۔ تدفین کی سرنگ 2000 سال سے بھی زیادہ پرانی ہے۔ اس دریافت کو کرنےوالے گروپ کے سربراہ بدری حسین کا کہنا ہے کہ یہاں ممی کی تیاری میں استعمال ہونے والا تیل اور کیمیکل میک اپ اس دریافت کو زیادہ اہم بناتے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ اب وہ ممی بنانے کے لیے استعمال ہونے والے تیل کی درست قسم شناخت کرنے کے قابل ہو گئے ہیں۔ یہاں پر سونے سے مزین چاندی کا ایک ماسک بھی ملا ہے۔ اپنی نوعیت کا یہ دوسرا ماسک ہے جو اب تک ملا ہے۔

متعلقہ خبریں