حضرت حواعلیہ السلام اور حضرت آدم علیہ السلام دونوں سے غلطی ہوئی اور دونوں نے اللّٰہ کا کہا نہ مانا اس غلطی پر دونوں کو ندامت ہوئی انہوں نے اللّٰہ سےمعافی مانگی

حضرت حواعلیہ السلام اور حضرت آدم علیہ السلام دونوں سے غلطی ہوئی اور دونوں نے اللّٰہ کا کہا نہ مانا اس غلطی پر دونوں کو ندامت ہوئی انہوں نے اللّٰہ سےمعافی مانگی

حضرت حواعلیہ السلام اور حضرت آدم علیہ السلام دونوں سے غلطی ہوئی اور دونوں ... 16 مئی 2018 (15:21) 3:21 PM, May 16, 2018

حضرت حواعلیہ السلام اور حضرت آدم علیہ السلام دونوں سے غلطی ہوئی اور دونوں نے اللّٰہ کا کہا نہ مانا اس غلطی پر دونوں کو ندامت ہوئی انہوں نے

اللّٰہ سےمعافی مانگی اور دعا کی کہ:"اے میرے رب ہم نے اپنے نفس پر ظلم کیا اگر آپ نے ہم پر رحم نہ کیااور ہماری مغفرت نہ کی تو ہم نقصان اٹھانےوالوں میں سے ہوں گے"

اللّٰہ تعالٰی نے آدم اور حوا کو زمین پر اتار دیا اور کہا کہ:"تم ایک دوسرے کے دشمن رہو گے اور ایک خاص وقت تک تم کو زمین پر رہنا ہے میری طرف سے کوئی ہدایت آئے تو جو شخص اس ہدایت کو مانے گا نہ انہیں کسی بات کا کوئی اندیشہ ہو گا اور نہ کوئی غم, اور جو میری نصیحت سے منہ موڑے گا اس کے لیے دنیا میں زندگی تنگ ہو گی اور اس کو قیامت کے دن اندھا اٹھائیں گے"

جب حضرت آدم علیہ السلام آسمان سے اتر کر زمین پر آئے تووہ فرشتوں کی پاکیزہ باتیں سننے سے محروم ہو گئے اس لیے دل اداس رہنے لگا آپ نے اللّٰہ سے دعا کی اور کہا کہ:" میں تو فرشتوں کی صحبت سے محروم ہوگیا ہوں "

اللّٰہ تعالٰی نے فرمایا: "آپ مکہ معظمہ جائیں اور وہاں میرا گھر تعمیر کریں اس کا طواف کریں اور نماز پڑھیں " چنانچہ آپ علیہ السلام جبرئیل علیہ السلام کے ساتھ

مکہ معظمہ گئے اور وہاں خانہ کعبہ کی بنیاد رکھی اور وہاں طواف کیا اور نماز پڑھی-

متعلقہ خبریں