ہم ایک بہادراورمحب وطن پاکستانی سےمحروم ہوگئےہیں۔سراج رئیسای محب وطن پاکستانی تھے۔آرمی چیف

ہم ایک بہادراورمحب وطن پاکستانی سےمحروم ہوگئےہیں۔سراج رئیسای محب وطن پاکستانی تھے۔آرمی چیف

ہم ایک بہادراورمحب وطن پاکستانی سےمحروم ہوگئےہیں۔سراج رئیسای محب وطن ... 14 جولائی 2018 (23:42) 11:42 PM, July 14, 2018

مستونگ میں خود کش حملے میں شہید ہونے والے بلوچستان عوامی پارٹی کے رہنما نوابزادہ سراج رئیسانی کی تدفین ان کے آبائی علاقے کانک میں کی گئی ۔ سراج رئیسانی شہید کی میت کو پاکستانی پرچم میں لپیٹ کر موسی اسٹیڈیم لایا گیا ۔ پاک فوج کے دستے نے شہید کی میت کو سلامی پیش کی ۔نوابزاہ سراج رئیسانی شہید کی میت کو پاکستانی پرچم میں لپیٹ کر موسی اسٹیڈیم لایا گیا ۔تفصیلات کے مطابق ہفتے کو نوابزادہ سراج رئیسانی کی نمازہ جنازہ ادا کرنے سے قبل انکی میت کو پاکستانی پرچم میں لپیٹ کر موسی اسٹیڈیم لایا گیا جہاں پاک فوج کے دستے نے شہید کی میت کو سلامی پیش کی ۔ اس سانحہ پر حکومت بلوچستان کی جانب سے دو روزہ سوگ کا اعلان کیا گیا تھا جس کے باعث قومی پرچم سر نگوں رہا ، سرکاری حکام کے مطابق اس خود کش حملے میں کم از کم 130 افراد شہید اور 122 سے زائد زخمی ہوگئے تھے۔ ان کی نماز جنازہ میں پاکستان فوج کے سربراہ جنرل قمر باجوہ نے بھی شرکت کی ، نماز جنازہ کے بعد ان کی لاش کو ان کے آبائی علاقے لے جایا گیا جہاں ان کی تدفین مکمل سرکاری اعزاز کے ساتھ کیا گیا ۔ اس موقع پر آرمی چیف شہید سراج رئیسانی کے گھر تشریف لے گئےجہاں انہوں نے سراج رئیسانی کے اہل خانہ کے ساتھ تعزیت کی اور انکے لیے فاتحہ خوانی کی۔ اس موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ ہم ایک بہادراورمحب وطن پاکستانی سےمحروم ہوگئےہیں ۔ سراج رئیسای محب وطن پاکستانی تھے۔ ہم ایک قوم بن کردہشتگردی اورانتہاپسندی کوشکست دیں گے۔دیرپاامن کی منزل قریب ہے۔

متعلقہ خبریں