ایبٹ آباد میں درجنوں مکانات منہدم اور کئی منہدم ہونے کا خدشہ۔مکین امداد کے منتظر۔چیف جسٹس کو صدائیں لگانے لگے

ایبٹ آباد میں درجنوں مکانات منہدم اور کئی منہدم ہونے کا خدشہ۔مکین امداد کے منتظر۔چیف جسٹس کو صدائیں لگانے لگے

ایبٹ آباد میں درجنوں مکانات منہدم اور کئی منہدم ہونے کا خدشہ۔مکین امداد کے ... 12 جون 2018 (16:34) 4:34 PM, June 12, 2018

ایبٹ آباد (ویب ڈیسک)سرکل بکوٹ یو سی بیروٹ کے گاؤں باسیاں گُلند کوٹ میں لینڈ سلائڈنگ سے مُتاثرہ درجنوں مکانات حُکومتی توجہ کے منتظر ہیں .ڈیڑھ سال قبل بارش سے کئی مکانات زمین بوس اور دیگر متاثر ہو چُ کے ہیں .متاثرین نے چیف جسٹس آف پاکستان سے اپیل کی ہے کہ وہ ازخُود نوٹس لیں .اب بھی بارشوں کا سلسلہ وقتاّ فوقتاّ جاری رہتا ہے .اس سے پہلے لینڈ سلائڈنگ کے نتیجے میں کئی مکان زمین بوس ہو گئے تھے اور کئی مکانوں کی دیواروں میں دراڑیں پڑ گئی تھیں. جس کی وجہ سے یہاں کے مکین سخت خوف میں مُبتلا ہیں کہ کسی وقت بھی یہ مکان گرسکتے ہیں اور جانی و مالی نُقصان ہو سکتا ہے .

قاری افتخار احمد نے اردو دنیا کو بتایا کہ جی ایس پی اپنی رپورٹس سابق وزیرِ اعلیٰ خیبر پختونخواہ ,سیکرٹری ڈی سی آفس اور تمام مُتعلقہ احکام کو بھیجی گئیں مگر کوئی نوٹس نہیں لیا گیا .مکینوں نے چیف جسٹس سے اپیل کی ہے کہ وہ جلد از جلد نوٹس لیں کیونکہ 16 مکان لینڈ سلائڈنگ کی ذد میں ہیں اور کسی وقت بھی جانی نُقصان ہو سکتا ہے . اہلِ محلہ نے اپیل کی ہے کہ چیف جسٹس ثاقب نثار صاحب خُود نوٹس لے کر مدد کروائیں تاکہ لوگ محفوظ جگہ لے کر, گھر بنا کر رہائش پذیر ہو سکیں . علاقے کی چاروں طرف سے لینڈ سلائیڈنگ کا خطرہ ہے .

متعلقہ خبریں