پیپلزپارٹی نے الیکشن کے لیےامیدواروں کی لسٹیں جاری کر دیں

پیپلزپارٹی نے الیکشن کے لیےامیدواروں کی لسٹیں جاری کر دیں

پیپلزپارٹی نے الیکشن کے لیےامیدواروں کی لسٹیں جاری کر دیں 11 جون 2018 (20:28) 8:28 PM, June 11, 2018

پیپلز پارٹی نے الیکشن کے لیے لسٹیں جاری کر دیں ہیں -پیپلز پارٹی نے قومی اور صوبائی اسمبلی کے لیے ایک سو ساٹھ امیدواروں کا اعلان کر دیا ہے -پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو این اے 200 لاڑکانہ اور این اے 246 کراچی سے الیکشن لڑیں گے جبکہ سابق چیئر مین پیپلز پارٹی آصف زرداری این اے 213 سے انتخابات میں حصہ لیں گے اوراین 206 سے سید خورشید شاہ حصہ لیں گے -جاوید قمر این اے 228 سےالیکشن میں حصہ لیں گے شہلا رضا این اے 243 سے عمران خان کے مد مقابل ہوں گی -فریال تالپور پی ایس 10 جبکہ سابق وزیر اعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ پی ایس 80 سے الیکش لیں گے شرجیل میمن پس ایس 63 پی ایس 11 لاکانہ ٹو سے نثار کھوڑو الیکشن میں حصہ لیں گے اور مرتضیٰ وہاب پی ایس 111 سے مقابلہ کریں گے -

اس سے قبل پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو زرداری نے الیکشن کاغذات نامزدگی جمع کروا دیےہیں بلاول بھٹو لیاری این اے 246 سے الیکشن لڑیں گے - بلاول بھٹو کے کاغذات نامزدگی رمیش کمار نے جمع کیے ہیں الیکشن کمیشن میں پیپلز پارٹی کے کارکنان کی ایک بڑی تعداد موجود تھی -جنہوں نے ان کا استقبال کیا - ان کے علاوہ پیپلز پارٹی کے سیاسی رہنما بھی وہاں موجود تھے جہنوں نے بینظیر بھٹو ,ذولفقار بھٹو کے نام کے نعروں کے ساتھ ان کا استقبال کیا -لیاری کو پیپلز پارٹی کی آبائی نشست بھی کہا جاتا ہے -

یاد رہیکہ اس سے قبل پاکستان پیپلز پارٹی کے سربراہ آصف علی زرداری نے اپنے آبائی شہر نوابشاہ سے اگلے عام انتخابات میں حصہ لینے کا اعلان کیاتھا ۔سابق صدر نے بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے چیف منسٹر ہاؤس میں ایک استقبالیہ کے دوران صحافیوں کے ساتھ غیر رسمی گفتگو کے دوران اعلان کیا ۔ زرداری نے کہا کہ وہ اپنے آبائی شہر سے قومی اسمبلی کی نشست کے لئے انتخابات میں مقابلہ کریں گے، کیونکہ نوابشاہ کے لوگ ان کی قیادت کرنے کے خواہاں ہیں. انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ میں جانے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ وہاں ساتھی ارکان کیساتھ ملکر قوم کی نمائندگی کر سکوں۔آصف علی زرداری نے کہا کہ تاہم، یہ یقین نہیں سے نہیں کہہ سکتا کہ کون سی نشست سے وہ مقابلہ کریں گے، اور کیا وہ ملک کے کسی دوسرے حصے سے مقابلہ کریں گے کہ نہیں . جب آصف علی زرداری پوچھا گیا کہ آیا نوابشاہ کے انتخابات میں حصہ لینا ضروری تھا، زرداری نے کہا کہ وہ ملک بھر میں کہیں بھی مقابلہ کرسکتے ہیں، لیکن نوابشاہ کے لوگوں نے یہ خواہش ظاہر کی ہے کہ انہیں ان کی نمائندگی کرنی چاہئے۔

متعلقہ خبریں