متحدہ عرب امارات کی وفاقی عدالت نے کہا ہے کہ واٹس ایپ پر کسی کو گالی دینے یا برا بھلا کہنے کی سزا ملک سے بے دخلی ہے۔

متحدہ عرب امارات کی وفاقی عدالت نے کہا ہے کہ واٹس ایپ پر کسی کو گالی دینے یا برا بھلا کہنے کی سزا ملک سے بے دخلی ہے۔

متحدہ عرب امارات کی وفاقی عدالت نے کہا ہے کہ واٹس ایپ پر کسی کو گالی دینے یا ... 11 جولائی 2018 (21:53) 9:53 PM, July 11, 2018

متحدہ عرب امارات کی وفاقی عدالت نے کہا ہے کہ واٹس ایپ پر کسی کو گالی دینے یا برا بھلا کہنے کی سزا ملک سے بے دخلی ہے۔

عرب خبر رساں ایجنسی کے مطابق فیڈرل عدالت نے واٹس ایپ کے ذریعہ پیش کی جانے والے دلائل کوصحیح مان کر ایک خاتون کو ملک سے بیدخل کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس نے کسی دوسری خاتون کو واٹس ایپ کے ذریعہ گالی دی تھی۔ عدالت نے کہا ہے کہ واٹس ایپ سمیت سوشل میڈیا کے دیگر ذرائع سے کئے جانے والے جرائم سائبر کرائم میں شامل ہوتے ہیں۔

متعلقہ خبریں