شریف فیملی کے خلاف نیب ریفنسز کی سماعت احتساب عدالت نے مزید وقت کے لیے سپریم کورٹ کو خط لکھ دیا

شریف فیملی کے خلاف نیب ریفنسز کی سماعت احتساب عدالت نے مزید وقت کے لیے سپریم کورٹ کو خط لکھ دیا

شریف فیملی کے خلاف نیب ریفنسز کی سماعت احتساب عدالت نے مزید وقت کے لیے سپریم ... 09 جون 2018 (17:45) 5:45 PM, June 09, 2018

شریف فیملی کے خلاف نیب ریفنسز کی سماعت مقررہ وقت نہیں ہو سکی ہے احتساب عدالت نے مزید وقت کے لیے سپریم کورٹ سے رجوع کر لیا ہے سپریم کورٹ کو جو خط لکھا گیا ہے اس میں کہا گیا ہے کہ احتساب عدالت کو دیا گیا وقت نو جون کو ختم ہو رہا ہے جبکہ ابھی تک تمام گواہان کے بیانات مکمل ریکارڈ نہیں ہوئے العزیزیہ ملز کے کیس میں واجد ضیاء پر جرح جاری ہے جبکہ فلیگ شپ ریفرنس میں بھی واجد ضیاء اور تفتیشی افسر کا بیان قلم بند ہونا رہتا ہے ریفرنسز کا فیصلہ نو جون تک سنانا ممکن نہیں لہٰذا وقت کو بڑھایا جائے سپریم کورٹ پہلے بھی احتساب عدالت کی درخواست پر دو ماہ کی توسیع دے چکی ہے عدالت میں نواز شریف اور کیپٹن صفدر پیش ہو گئے ہیں جبکہ مریم نواز ایک دن کے لیے غیر حاضر رہیں -

متعلقہ خبریں