لاہور ہائیکورٹ نے نگراں وزیراعظم ناصر الملک کے دورہ سوات پر وفاقی حکومت سے جواب طلب کر لیا

لاہور ہائیکورٹ نے نگراں وزیراعظم ناصر الملک کے دورہ سوات پر وفاقی حکومت سے جواب طلب کر لیا

لاہور ہائیکورٹ نے نگراں وزیراعظم ناصر الملک کے دورہ سوات پر وفاقی حکومت سے ... 08 جون 2018 (15:09) 3:09 PM, June 08, 2018

لاہور: لاہور ہائیکورٹ نے نگراں وزیراعظم ناصر الملک کے دورہ سوات پر اٹھنے والے اخراجات کی واپسی کے لئے درخواست پر وفاقی حکومت سے جواب طلب کر لیا۔

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس مامون رشید شیخ نے کیس کی سماعت کی۔ درخواست گزار بیرسٹر جاوید اقبال جعفری نے موقف اختیار کیا ہے کہ نگراں وزیراعظم نے ذاتی امور کے لئے اپنے آبائی علاقے سوات میں 22 گاڑیوں کے کانوائے اور پروٹوکول کو استعمال کر کے قومی خزانے کو نقصان پہنچایا ہے۔ درخواست گزار نے استدعا کی کہ عدالت معاملے کا نوٹس لے اور اس پر اٹھنے والے اخراجات واپس لینے کا حکم دے۔

یاد رہکہ نگران وزیر اعظم ناصر الملک نے عہدہ کا حلف اٹھا کر عہدہ سنبھالتے ہی ایسے شاہانہ پروٹوکول میں اپنے گاؤں پہنچے کہ ہر کوئی دیکھتا رہ گیا وزیر اعظم ناصرالملک بائیس گاڑیوں اور ایک ہیلی کاپٹر کے ساتھ سوات گئے - ناصرالملک نے اپنے اس شاہانہ رویے سے دوسروں وزیروں کو بھی مات دے دی ہے -ایک طرف چیف جسٹس ثاقب نثار وزیروں کو دی گئی گاڑیاں واپس لے رہے ہیں اور دوسری طرف نگران وزیر اعلیٰ بائیس گاڑیوں کے قافلے کو لیکر سوات پہنچ گئے ہیں وزیراعظم اپنا پہلا تاثر ہی صحیح قائم نہیں کر سکے ہیں -اب دیکھنا یہ ہے کہ نگران وزیراعظم اگلے دو ماہ میں بھی کچھ کرتے ہیں یا صرف وزارت کے عہدے سے لطف ہی اٹھائیں گے -

متعلقہ خبریں