ایران کا دفاعی میدان میں بڑا کارنامہ،اہم ٹیکنالوجی حاصل کر لی

ایران کا دفاعی میدان میں بڑا کارنامہ،اہم ٹیکنالوجی حاصل کر لی

ایران کا دفاعی میدان میں بڑا کارنامہ،اہم ٹیکنالوجی حاصل کر لی 07 جون 2018 (17:20) 5:20 PM, June 07, 2018

ایران نے ایک نیا ڈرون ظیارہ تیار کر لیا ہے جس کا نام فطرس ہے۔ اسے ایران کی دفاعی صنعت کے انجینئروں نے ڈیزائن اور تیار کیا ہے۔

فطرس 25 ہزار فٹ کی اونچائی تک با آسانی اڑ سکتا ہے اور اسے2 ہزار کلومیٹر کی رینج میں بغیر کسی مشکل کے کنٹرول کیا جا سکتا ہے فطرس کی ایک اور خاص بات یہ ہے کہ یہ 16 سے 30 گھنٹے تک لگاتار پرواز کر سکتا ہے۔

فطرس مختلف قسم کے گائیڈڈ راکٹ اور میزائل لے جانے اور انہیں فائر کرنے کی بھی صلاحیت رکھتا ہے۔ ایران میں بننے والا اب تک کا یہ سب سے بڑا ڈرون ہے۔

یاد رہیکہ امریکی اخبار "نیویارک ٹائمز" کے مطابق کیلیفورنیا ریاست میں ہتھیاروں کے محققین کی ایک ٹیم نے بیلسٹک میزائل کی ترقی سے متعلق ایرانی پروگرام کے حوالے سے نئی تفصیلات کا پتہ چلایا ہے۔

اخبار کا کہنا ہے کہ مذکورہ محققین کو ملنے والے شواہد کے مطابق ایرانی پاسداران انقلاب شمالی ایران کے علاقے شاہرود کے ایک صحراء میں بیلسٹک میزائلوں کی ترقی اور ان کے تجربات کے اس خفیہ پروگرام کی دیکھ بھال کر رہی ہے۔

اخبار کے مطابق محققین نے کئی ہفتوں تک مصنوعی سیاروں کے ذریعے اس تنصیب کی تصاویر لیں۔ یہاں انہوں نے ملاحظہ کیا کہ رات کے اندھیروں میں جدید میزائلوں کے انجن اور ان کے ایندھن پر کام کیے جانے کے حوالے سے توجہ مرکوز ہے۔

متعلقہ خبریں