احتساب عدالت میں آج ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ ڈھائی بجے نماز جمعہ کے بعد سنایا جائے گا۔

احتساب عدالت میں آج ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ ڈھائی بجے نماز جمعہ کے بعد سنایا جائے گا۔

احتساب عدالت میں آج ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ ڈھائی بجے نماز جمعہ کے بعد ... 06 جولائی 2018 (15:46) 3:46 PM, July 06, 2018

احتساب عدالت میں آج ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ سنایا جانا تھا۔ ایون فیلد ریفرنس کیس کا فیصلہ گیارہ بجے سنایا جانا تھا جس کے بعد اسے ساڑھے بارہ تک سنانے کا اعلان کیا گیا۔ ساڑھے بارہ بجے عدالتی عملے نے بتایا کہ فیصلہ ڈھائی بجے تک موخر کر دیا گیا ہے۔ عدالت کا کہنا تھا کہ فیصلہ ڈھائی بجے نماز جمعہ کے بعد سنایا جائے گا۔ جس کے بعد تیسری مرتبہ کیس کا فیصلہ موخر کر دیا گیا اور 3 بجے کیس کا فیصلہ سنانے کا اعلان کیا گیا۔

یاد رہیکہ اسلام آباد کی احتساب عدالت میں ایون فیلڈ ریفرنس کی سماعت شروع ہوگئی ہے اور سابق وزیرِ اعظم نواز شریف کے خلاف فیصلے کا اعلان کچھ دیر میں متوقع ہے۔قومی احتساب بیورو (نیب) کی جانب سے دائر ریفرنس کی سماعت احتساب عدالت کے جج محمد بشیر کر رہے ہیں۔ ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کے علاوہ ان کی صاحب زادی مریم نواز اور ان کے شوہر کیپٹن (ر) صفدر بھی شریک ملزم نامزد ہیں۔نیب پراسیکیوٹر نے عدالت سے ملزمان کو 14 سال قید کی سزا دینے کی درخواست کر رکھی ہے۔ عدالت فیصلے سے قبل نواز شریف اور مریم نواز کی جانب سے دائر اس درخواست کا فیصلہ کرے گی جس میں انہوں نے فیصلے کا اعلان کچھ روز کے لیے مؤخر کرنے کی استدعا کی تھی۔اپنی درخواست میں نواز شریف نے موقف اختیار کیا ہے کہ وہ چاہتے ہیں کہ فیصلہ سنائے جانے کے وقت وہ کمرۂ عدالت میں موجود ہوں۔ نواز شریف اپنی اہلیہ کلثوم نواز کی عیادت کے باعث گزشتہ کئی ہفتوں سے لندن میں مقیم ہیں جہاں ان کے ہمراہ ان کی صاحبزادی مریم نواز بھی ہیں۔کیپٹن (ر) صفدر پاکستان میں ہی موجود ہیں لیکن وہ جمعے کی سماعت کے موقع پر عدالت نہیں آئے ہیں۔

متعلقہ خبریں