پاکستان میں دس سال سے جمہوریت ہے مگر میاں نواز شریف نے کبھی کوئی سیاسی جدوجہد نہیں کی ہے . نواز شریف سیاسی پناہ لے کر خود پر خُود کش حملہ نہیں کریں گے .علی محُمدخان

پاکستان میں دس سال سے جمہوریت ہے مگر میاں نواز شریف نے کبھی کوئی سیاسی جدوجہد نہیں کی ہے . نواز شریف سیاسی پناہ لے کر خود پر خُود کش حملہ نہیں کریں گے .علی محُمدخان

پاکستان میں دس سال سے جمہوریت ہے مگر میاں نواز شریف نے کبھی کوئی سیاسی جدوجہد ... 06 جولائی 2018 (12:57) 12:57 PM, July 06, 2018

وسیم بادامی کے پروگرام میں پاکستان تحریک انصاف کے رہنما علی محُمد نے گُفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پہلی بات یہ ہے کہ ہمدردی کا عنصر تب ہوتا ہے جب کسی کی وجہ سے سہولتوں اور اُس کے احسان کی وجہ سے آپ اور آپ کے بچوں کو آرام ملا ہو, آپ کو روزگار ملا ہو ,بجلی ملی ہو آپ کو سیکیورٹی ملی ہو ,آپ کو علاج ملا ہو اور سب سے بڑی اور اہم بات یہ کہ آپ کو عزتِ نفس ملی ہو . ریاست نے آپ کی مدد کی ہو ,آپ کو آرام مُیسر ہو .اگر میاں نواز شریف صاحب نے عوام کو یہ تمام سہولیات دی ہیں تو ہمدردی کا عنصر بھی لوگوں کے دلوں میں موجود ہو گا . لیکن کبھی بھی الیکشن ورکر کی ووٹوں سے نہیں جیتا جاتا ہے اور ورکر حالات سے اثر لیتا ہے. میاں نواز شریف نے جو جماعت بنائی ہے وہ سارے نظرئیے کی جماعت نہیں ہے . میں سمجھتا ہوں کہ اگر اُن کے خلاف فیصلہ نہیں آتا ہے تو بُہت بڑا سیاسی فیصلہ ہو گا . اگر وہ پاکستان آتے ہیں تو ہو سکتا ہے کہ سیاسی نُقصان تھوڑاکم ہو اگر وہ مُلک واپس آتے ہی نہیں تو اُن کا بہت بڑا سیاسی نُقصان ہو گااور اُن کی جماعت اور سیاست ختم ہو کر رہے جائے گی .

پاکستان میں دس سال سے جمہوریت ہے مگر میاں نواز شریف نے کبھی کوئی سیاسی جدوجہد نہیں کی ہے . نواز شریف سیاسی پناہ لے کر خود پر خُود کش حملہ نہیں کریں گے .

ضرور پڑھیں:نواز شریف پانچ وقت کے نمازی ہیں،وہ اپنے ماں باپ کا احترام کرنے والے بیٹے ہیں۔ لیکن بحیثیت حکمران وہ مکمل طور پر۔۔۔۔۔۔ سابق لیگی رہنما کا اہم انکشاف

ضرور پڑھیں:تحریکِ انصاف کو کنگ پارٹی بنانے کی کوشش کی جا رہی ہے .پری پول دھاندلی کی جا رہی ہے .عوام کو۔۔۔۔۔۔۔ بلاول بھٹو کی تحریکِ انصاف پر چڑھائی

ضرور پڑھیں:ایون فیلڈ ریفرنس کا فیصلہ چند ساعتوں میں متوقع،نامزد ملزمان نواز شریف،مریم نواز اور ان کے شوہر کیپٹن (ر) صفدر عدالت پیش نہ ہوئے

ضرور پڑھیں:میاں نواز شریف کی خواہش ہے کہ وہ اپنی اہلیہ کو پاکستان آنے سے پہلے ایک دفعہ ہوش میں ملنا چاہتے ہیں اُن سے بات چیت کرنا چاہتے ہیں . اگر میاں نواز شرہف کو قید کر کے جیل میں۔۔۔۔۔۔عُظمیٰ بُخاری کی تاویل

متعلقہ خبریں