الحدیدہ میں فوج اور باغیوں کے درمیان شدید لڑائی کا خطرہ دوبارہ منڈلانے لگا

الحدیدہ میں فوج اور باغیوں کے درمیان شدید لڑائی کا خطرہ دوبارہ منڈلانے لگا

الحدیدہ میں فوج اور باغیوں کے درمیان شدید لڑائی کا خطرہ دوبارہ منڈلانے لگا 06 جولائی 2018 (10:12) 10:12 AM, July 06, 2018

یمن کے عسکری ذرائع کے مطابق ساحلی شہر الحدیدہ میں باغیوں کے انخلاء کی پرامن کوششوں میں ناکامی کے بعد فوجی کارروائی کے امکانات میں اضافہ ہو گیا ہے۔ کسی بھی مُمکنہ فوجی کارروائی کے لیے الحدیدہ میں سرکاری فوج کو تازہ دم دستے پہنچا دیے گئے ہیں جب کہ المخاء اور الحدیدہ کےدرمیان سپلائی لائنوں کی سیکیورٹی بھی مزید سخت کردی گئی ہے۔

ضرور پڑھیں:اسرائیل نے اپنے سابق وزیر کو ایران کے لیے جاسوسی کے الزام میں گرفتار کر لیا

ضرور پڑھیں:اب چاند پر جوڑے ایک دوسرے کو پروپوز کر سکیں گے،دلچسپ ترین خبر آ گئی۔

یمن کے عسکری حکام کا کہنا ہے کہ مغربی ساحلی محاذ پر فوج کو نئے معرکے کے لیے تیار کیا جا رہا ہے۔ الحدیدہ شہراور بندرگاہ کو حوثی باغیوں سے چھڑانے کے لیے پُرامن کوششوں کی ناکامی کے بعد وسیع پیمانے پر آپریشن شروع کیا جا سکتا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ اقوام متحدہ کے یمن کے لیے خصوصی ایلچی کی طرف سے دی گئی ڈیڈ لائن ختم ہونے کے بعد حالات ڈرامائی انداز میں تبدیل ہوسکتے ہیں۔

دوسری جانب حوثی باغیوں نے بھی الحدیدہ میں ممکنہ فوجی آپریشن کے پیش نظر اسلحہ اور جنگجوؤں کو الحدیدہ پہنچانا شروع کردیا ہے۔

متعلقہ خبریں