سعودی عرب کے ج نرل آڈٹ بیورو نے غیر قانونی طریقے سے حاصل 8 ارب 30 کروڑ ریال کی کردہ رقوم واپس قومی خزانے میں جمع کرا دیں۔

سعودی عرب کے ج نرل آڈٹ بیورو نے غیر قانونی طریقے سے حاصل 8 ارب 30 کروڑ ریال کی کردہ رقوم واپس قومی خزانے میں جمع کرا دیں۔

سعودی عرب کے ج نرل آڈٹ بیورو نے غیر قانونی طریقے سے حاصل 8 ارب 30 کروڑ ریال کی ... 05 جولائی 2018 (11:47) 11:47 AM, July 05, 2018

سعودی عرب کے جنرل آڈٹ بیورو نے غیر قانونی طریقے سے حاصل کردہ رقوم کی مانیٹرنگ اور رقوم کی قومی خزانے میں واپسی کے عمل میں 8 ارب 30 کروڑ ریال کی رقم قومی خزانے میں جمع کرا دی ہے۔

ضرور پڑھیں:برطانیہ میں نرس بچوں کیساتھ کیا کام کرتی رہی ،ایسی خبر جس نے برطانیہ کو ھلا کر رکھ دیا۔

ضرور پڑھیں:نمکہ مکرمہ میں خاتون کی گاڑی کو آگ لگادی گئی۔

ضرور پڑھیں:بیٹا ماں کو اولڈ ہاؤس بھجوانا چاہتا تھا ماں نے بیٹے کو دنیا سے بھجوا دیا،دونوں کی عمریں جانکر ہر کوئی حیران رہ گیا۔

ضرور پڑھیں:اگر ایران نے خطے کے ممالک کے تیل کی برآمدات بند کیں تو ھم اسکی۔۔۔۔۔۔۔۔امریکہ نے ایران کی اہم ترین چیز بند کرنے کی دھمکی دے دی۔

مملکت کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ’ایس پی اے‘ کے مطابق مملکت میں مالی بے ضابطگیوں کے دوران حاصل کی گئی آٹھ ارب تیس کروڑ ریال کی رقم قومی خزانے میں جمع کرائی گئی۔ آڈٹ بیورو کو تحقیقات کے دوران پتا چلا تھا کہ بعض افراد اور اداروں کی طرف سے غیر مجاز طریقے سے رقوم حاصل کی گئی ہیں اور انہوں نے قانون کے تحت ان کا آڈٹ کرایا اور نہ رقوم قومی خزانے میں جمع کرائیں۔خیال رہے کہ خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے جنرل آڈٹ بیورو کے 353 ملازمین کی پیشہ وارانہ خدمات اور لوٹی دولت قومی خزانے میں جمع کرانے پر ایک کروڑ ریال کی رقم تقسیم کرنے کی منظوری دی تھی۔

متعلقہ خبریں