والدین کے کاندھوں پر یہ ذمّے داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اپنے بچوں کی تعلیم کے لیے مناسب حالات پیدا کریں،سعودی جنرل پراسیکیوشن

والدین کے کاندھوں پر یہ ذمّے داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اپنے بچوں کی تعلیم کے لیے مناسب حالات پیدا کریں،سعودی جنرل پراسیکیوشن

والدین کے کاندھوں پر یہ ذمّے داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اپنے بچوں کی تعلیم کے ... 04 ستمبر 2018 (16:56) 4:56 PM, September 04, 2018

سعودی عرب میں جنرل پراسیکیوشن نے والدین کو خبردار کیا ہے کہ وہ اپنی اولاد کی تعلیم کا سلسلہ منقطع کرنے کا اور تعلیم کے حصول میں عدم معاونت کا سبب نہ بنیں۔ استغاثہ نے واضح کیا ہے کہ مذکورہ ممانعت سے متعلق سزائیں Child Protection Act کی چوتھی شق کے زمرے میں آتی ہیں۔

سعودی استغاثہ نے ٹوئیٹر پر اپنے سرکاری اکاؤنٹ پر جاری ٹوئیٹ میں بتایا کہ والدین کے کاندھوں پر یہ ذمّے داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اپنے بچوں کی تعلیم کے لیے مناسب حالات پیدا کریں، اس سلسلے میں اُن کی مدد کریں اور مختلف اقسام کے انحراف سے اپنے بچوں کی حفاظت کریں۔ بچوں کی تعلیم کا سلسلہ منقطع کر دینا ،،، ایذا رسانی اور عدم توجہی کی صورتیں ہیں اور یہ مملکت کے متعین نظام کے تحت پوچھ گچھ کا متقاضی ہے ۔سعودی وزارت تعلیم کے مطابق پرائمری اسکولوں میں تعلیمی سال کے دوران طلبہ و طالبات کی 30% سے زیادہ غیر حاضری کی صورت میں سرپرست کو سرزنش کے لیے تشدد اور ایذا رسانی کی اطلاعات کے مرکز میں پیش کیا جائے گا۔ اس لیے کہ مذکورہ صورت حال کو بڑی عدم توجہی اور طالب علم کے تعلیمی سلسلے کے منقطع ہونے کا سبب بننا شمار کیا جائے گا۔

متعلقہ خبریں