سمارٹ فون کی مارکیٹ کا زوال شروع

سمارٹ فون کی مارکیٹ کا زوال شروع

سمارٹ فون کی مارکیٹ کا زوال شروع 04 جون 2018 (11:41) 11:41 AM, June 04, 2018

ایک دہائی کی مسلسل ترقی کے بعد، اسمارٹ فون مارکیٹ میں اچانک تنزلی دیکھنے میں آئی ہے۔ سروے کے مطابق سمارٹ فون کی فروخت سال پہلی بار 2007 کے آئی فون کےآنے کیبعدکم ہونا شرو ع ہوئی تھی اور اب مزید تنزلی کی جانب رواں دواں ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ بہت سے عوامل نے اسمارٹ فون مارکیٹ میں کمی کی ہے ، صارفین کو نئی سہولیات مہیا کرنے کا فقدان اور چینی کمپنیوں کی بڑھتی ہوئی مارکیٹ ہے۔

ماہرین کیمطابق "یہ اسمارٹ فون کی تنزلی نہیں ہےبلکہ یہ سمارٹ فون مارکیٹ کی ترقی کی تنزلی ہے ۔سمارٹ فون مارکیٹ نے 2016 ء میں تنزلی کا سفر شروع کیا ۔اسکا یہ مطلب نہیں ہے کہ یہ ایک بڑی مارکیٹ نہیں ہے - یہ ایک بہت بڑی مارکیٹ ہے - لیکن اس کا مطلب یہ ہے کہ بیچنے والے کو مختلف طریقے سے سوچنا پڑے گا۔سروے کے مطابق، سامسنگ مارکیٹ لیڈر ہے، لیکن ایپل اس پر بازی لے گیا ہے۔چین کے ہواوی کی تعداد تین جگہ پر رہی ہے اور چینی سیٹ زوومی امریکی موجودگی کی کمی کے باوجود تیزی سے بڑھ رہا ہے "۔

بین الاقوامی ڈیٹا کارپوریشن نے کہا کہ 2017 اسمارٹ فون کی فروخت 0.1 فیصد 1.472 بلین ڈیوائسز کیلئے گر گئی ہے ، جس کی بڑی وجہ سامان کی ترسیل ہے۔

آئی ڈی سی 2018 میں 5G نیٹ ورک کی ڈیوائس میں کمی کی وجہ سے بھارت کی متحرک مارکیٹ میں کمی کی توقع رکھتا ہے.

متعلقہ خبریں