جب تک ہماری حکومت تھی تو سب ٹھیک تھا۔نواز شریف

جب تک ہماری حکومت تھی تو سب ٹھیک تھا۔نواز شریف

جب تک ہماری حکومت تھی تو سب ٹھیک تھا۔نواز شریف 04 جون 2018 (11:13) 11:13 AM, June 04, 2018

احتساب عدالت میں العزیزیہ اسٹیل مل ریفرنس کی سماعت پر پیشی کیلئے آنے والے نواز شریف سے صحافیوں نے غیررسمی گفتگو کے دوران نوا شریف نے کہا ہیکہ جب تک ہماری حکومت تھی تو سب ٹھیک تھا ۔ آخری دنوں میں شہباز شریف اور شاہد خاقان عباسی نے بہت سے منصوبوں کے افتتاح کیے۔

انہوں نے سوال اٹھایا کہ کیا یہ کام کسی ماضی کی حکومت نے کیے ،کیا کسی نے موٹروے بنائی ؟ کون تھا جو ملک کو اندھیروں میں ڈبو گیا اور کون تھا جو روشنیاں واپس لایا ؟ میری خواہش تھی وزیراعظم لاہور،ملتان،سکھرموٹروے کا افتتاح کرتے مگریہ موٹروے بنانے والوں نے تاخیر کر دی ۔ یہ منصوبے مئی 2018 میں مکمل ہونا تھےاگرمیں ہوتا تو تاخیر نہ ہوتی۔

وفاق اور پنجاب میں 39 میگا منصوبے شروع کئے۔ نیلم، جہلم اور تربیلا 4 کو مکمل کیا، گوادر کوئٹہ سڑک بنائی، برہان سے ڈی آئی خان تک سڑک زیر تعمیر ہے، یونیورسٹیاں اور اسپتال الگ ہیں۔ کیا یہ کام کسی ماضی کی حکومت نے کیے اور کیا کسی نے موٹر ویز بنائی، کون تھا جو ملک کو اندھیروں میں ڈبو گیا اور کون تھا جو روشنیاں واپس لایا۔

نواز شریف نے کہا کہ حیدر آباد کراچی موٹروے بن چکی ہے، کچھی کینال کا تاریخی منصوبہ مکمل کیا، لواری ٹنل دیکھ لیں جس کی وجہ سے چار گھنٹے سفر کم ہوا ہے۔ لواری ٹنل پہلے سال میں 6 ماہ بند رہتی تھی اور اب سارا سال کھلی رہتی ہے۔

نوازشریف نے مزید کہا کہ ہم نے نیلم جہلم اور تربیلا 4 کو مکمل کیا۔ گوادر کوئٹہ سڑک بنائی، برہان سے ڈی آئی خان سڑک زیر تعمیر ہے۔کوئی بتائے سنگل رکنی بینچ ایک قانون کو کیسےختم کرسکتا ہے

متعلقہ خبریں