کشمیر میں ظلم و تشدد کا سلسلہ جاری۔ جانی نقصان

کشمیر میں ظلم و تشدد کا سلسلہ جاری۔ جانی نقصان

کشمیر میں ظلم و تشدد کا سلسلہ جاری۔ جانی نقصان 02 جون 2018 (12:47) 12:47 PM, June 02, 2018

سرینگر : سرینگر کے علاقے نوہاٹا میں بھارتی پارلیمانی مرکزی سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کی گاڑی نے کشمیری نجوانوں کو کچل ڈالا جس سے ایک کشمیر شہید جبکہ ایک سخت زخمی ہو گیا ہے۔

تفصیلات کیمطابق یہ واقعہ سرینگر کے علاقے نوہاٹا میں پیش آ یا۔یہ واقعہ تب ہوا جب لوگ جمعہ کی نماز کے بعد بھارتی پولیس کی طرف سےجامع مسجد کے خاتمے کے خلاف نوہاٹا کے علاقے میں جامع مسجد کے باہر احتجاج کر رہے تھے۔

ذرائع کے مطابق دریں اثنا، ایک سی آر پی ایف کی تیز رفتار گاڑی آئی اور مظاہرین کی طرف بڑھنا شروع ہوگئی. عینی شاہدین نے بتایا کہ مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے سی آر پی ایف نے ایسا کیا. جسکے نتیجے میں ، دو لڑکے یونس احمد اور قیصر بٹ گاڑی سے کچلے گئے۔

واقعہ کے بعد مظاہرین نے بڑے پیمانے پر احتجاجی مظاہرے شروع کردیے. جھڑپوں میں کئی زخمی ہو گئے ہیں۔

سی آر پی ایف کی گاڑی سے نوجوانوں کو کچلنے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ھوگئی ہے، جس کے نتیجے میں ہندوستانی فورسز کے اہلکاروں پر بہت زیادہ تنقید ہوئی.اپنے والدین کی موت کے بعد قیصر گزشتہ چار سالوں سے سرینگر کے دلگیٹ علاقے میں اپنی چاچی اور بہنوں کے ساتھ رہ رہے تھے.

متعلقہ خبریں