شیخ عبدالقادر جیلانی ایک دفعہ عبادت میں مصروف تھے کہ ایک نورانی عرش ظاہر ہوااور اسمیں سے آواز آئ اے عبدالقادر میں تیرارب ہوں۔۔۔۔۔۔۔پڑھئے ایمان افروز واقعہ

شیخ عبدالقادر جیلانی ایک دفعہ عبادت میں مصروف تھے کہ ایک نورانی عرش ظاہر ہوااور اسمیں سے آواز آئ اے عبدالقادر میں تیرارب ہوں۔۔۔۔۔۔۔پڑھئے ایمان افروز واقعہ

شیخ عبدالقادر جیلانی ایک دفعہ عبادت میں مصروف تھے کہ ایک نورانی عرش ظاہر ... 02 جولائی 2018 (19:30) 7:30 PM, July 02, 2018

شیخ عبدالقادر جیلانی ک ایک مشہور واقعہ ہے .ایک دفعہ

عبادت میں مصروف تھے کہ ایک نورانی عرش ظاہر ہوااور اسمیں سے آواز آئ اے عبدالقادر میں تیرارب ہوں .جن چیزوں کو میں نے دوسروں پر حرام کیا وہ تجھ پر حلال کرتا ہوں.

ضرور پڑھیں:حجر اسود کی حفاظت پر چوبیس گھنٹوں میں 24 سیکیورٹی اہلکار مامور ہوتے ہیں اور ان میں سے ایک اہلکار ایک گھنٹہ تک اپنی ڈیوٹی انجام دیتا ہے ،ہر گھنٹے بعد حجر اسود کے محافظ کی ذمہ داری تبدیل ہوتی ہے اور اس کی جگہ دوسرا چاک وچوبند محافظ۔۔۔پڑھئے اہم معلومات

ضرور پڑھیں:17 رمضان: ام المومنین حضرت عائشہ صدیقہؓ کا یوم وفات

ضرور پڑھیں:بائس رمضان المبارک یوم شہادت شیر خدا داماد رسول صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم حضرت علی رضی اللّٰہ تعالٰی عنہ

ضرور پڑھیں:رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی ناموس کی توھین کرنے والے عیسائی مبلغ کا کتے نے کیا حال کیا-اور اس واقعے کو دیکھ کر کتنے لوگ مسلمان ھوئے-پڑھئے ایمان افروز واقعہ

شیخ عبدالقادر نے پوچھا :کیا تو وہی اللہ ہے جس کے سوا کوئی عبادت کے لائق نہیں .جواب نہ آیا

شیخ عبدالقادر نے کہا :دور ہو اللہ کے دشمن , کہا ہی تھا کہ سارانور تاریکی میں بدل گیا. پھر آواز آئ :اے عبدالقادر تجھےاللہ نے عقل و سمجھ عطا کی ہے ورنہ میں نے اس طرح میں نے ستر لوگوں کو گمراہ کیا ہے.

کسی آدمی نے سوال کیا آپ کو کیسے معلوم ہوا یہ شیطان ہے. آپ نے فرمایا جب اس نے کہا کہ جو چیزیں دوسروں کےلئے حرام ہیں وہ تجھ پر حلال کرتاہوں . کیوں کہ یہ بات طے شدہ ہےکہ ہمارے آخری رسول سیدنا محمد عربی ﷺ کے بعد شریعت نہیں تبدیل ہو سکتی .

دوسری وجہ یہ کہ جب میں نے اس سے پوچھاتو رب ہےتو وہ جواب نہیں دے سکا. کیوں کہ شیطان ہی دعوی تو کر سکتا ہے کہ وہ اللہ ہےلیکن یہ نہیں کہہ سکتاوہی اللہ ہےجس کےسا تھ کوئ عبادت میں شریک نہیں.

ضرور پڑھیں:غزوہ حنین کے بعدثقیف میں سے سب سے پہلے جو شخص اسلام کی غرض سے نبی پاک صلی اللہ علیہ وسلم کے پاس آیا وہ عروہ بن مسعود ثقفی تھا ۔ یہ اپنی قوم کا سردار تھا اور صلح حدیبیہ میں کفار کا وکیل بن کر آیا تھا ۔

ضرور پڑھیں:مومنوں کی ماں حضرت خدیجہ رضی اللہ تعالیٰ عنہہ کا یوم وصال دس رمضان المبارک۔پڑھئے سیدہ خدیجہ رضی اللہ تعالیٰ عنہہ کی سیرت مبارکہ

ضرور پڑھیں:کون لوگ شیطان کے دوست اور کون لوگ دشمن ہیں-ایک صحابی رضی اللہ عنہ اور ابلیس کے درمیان دلچسپ مکالمہ

ضرور پڑھیں:خلاء میں نماز اور روزے جیسی عبادات کی ادائیگی کرنے والے خو ش نصیب ملیشیا کے شہری ڈاکٹر مظفر

ضرور پڑھیں:حضرت امام شافعی کے زمانے میں دیگر مذاہب کے بعض علماء نے علمائے اسلام سے مناظرہ شروع کردیا۔ بغداد میں بہت بڑا اجتماع ہوا۔ دریائے دجلہ پر بحث و مناظرہ شروع ہوا۔ حضرت امام شافعی جو علمائے اسلام کی طرف سے آئے ہوئے تھے

متعلقہ خبریں