میرے 1 لاکھ 70 ہزار ووٹ پڑے تھے،میں آخری اوور تک میچ کھیلوں گا، ہار نہیں مانوگا،عابد شیر علی

میرے 1 لاکھ 70 ہزار ووٹ پڑے تھے،میں آخری اوور تک میچ کھیلوں گا، ہار نہیں مانوگا،عابد شیر علی

میرے 1 لاکھ 70 ہزار ووٹ پڑے تھے،میں آخری اوور تک میچ کھیلوں گا، ہار نہیں ... 02 اگست 2018 (21:19) 9:19 PM, August 02, 2018

پاکستان مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنماوسابق وزیر مملکت برائے بجلی و پانی عابد شیر علی نے 2018کے عام انتخابات کو پاکستان کا سب سے بدترین الیکشن قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ این اے 108میں میراالیکشن چوری کیا گیا. پولنگ ایجنٹس کو ہراسان کیا گیا، اگر سلیکشن کرنی تھی تو الیکشن پر عوام کے کھربوں روپے کیوں ضائع کیے،لاڈلے کو آگے لانا تھا تو الیکشن کیوں کروائے ا ب تک 220 پولنگ اسٹیشن کھولے گئے ہیں، میرے 1 لاکھ 70 ہزار ووٹ پڑے تھے،میں آخری اوور تک میچ کھیلوں گا، ہار نہیں مانوگا، پریذائڈنگ آفیسر کے سائن کی جگہ دل بنے ہوئے ہیں، اس فراڈ الیکشن کو مسترد کرتا ہوں،آن لائن کے مطابق فیصل آباد این اے 108میں سابق وزیر مملکت برائے بجلی و پانی عابد شیر علی کی درخواست پر دوبار گنتی کا عمل جاری تھا کہ220 پولنگ اسٹیشن کھولینے بعد ووٹوں کا فرق سامنے نہ آنے پر آر او نے گنتی روکتے ہوئے مزید گنتی کی درخواست کو مسترد کردیا جس پرسابق وزیر مملکت برائے بجلی و پانی عابد شیر علی نے شدید احتجاج کیا اور رزلٹ کو ماننے انکار کردیا

متعلقہ خبریں